Politics

now browsing by category

 

Eik Mazloom MardeMujahid Ka UmmateMuslima key Naam Paigham!

*پانچ سالہ قید وبند کے ایمان افروز محسوسات*

ڈاکٹر صلاح سلطان

*(ڈاکٹر صلاح سلطان مصر کے زبردست عالم، داعی اور مربی ہیں، پانچ سال قبل فوجی باغیوں نے ڈاکٹر مرسی کی حکومت پر غاصبانہ قبضہ کیا، تو ہزاروں اسلام پسندوں کے ساتھ ڈاکٹر صلاح سلطان بھی جیل میں بند کردئے گئے، پانچ سال گزرنے پر انہوں نے جیل کے اندر سے اپنے احساسات رقم کر کے بھیجے، کچھ حذف واختصار کے ساتھ اس ایمان افروز تحریر کا ترجمہ پیش ہے۔ محی الدین غازی)*

جیلوں کی تاریک کوٹھریوں میں کھلا ہوا ظلم سہتے سہتے پانچ سال گزر گئے، ان برسوں میں ایسی ایسی سختیاں اور اتنے ظلم وستم ہوئے کہ پانچ سال کئی صدیوں کی طرح لگے، لیکن اس عرصے میں اللہ کے اتنے انعام اور ایسے کرم ہوئے کہ لگا ایک حسین دور تھا جو لمحوں میں گزر گیا۔

جرم وخیانت کے ہاتھوں نے جو کچھ ہمارے ساتھ کیا وہ تو سارا کا سارا اللہ کے ریکارڈ میں محفوظ ہورہا ہے، وہ داستان ایسی ہولناک ہے کہ اس کا کوئی ایک حصہ بھی لفظوں میں بیان نہیں کیا جاسکتا ہے۔ لیکن دوسری طرف اللہ نے ہمیں وہ جمیل صبر عطا کیا، وہ بے لوث استقامت دی، اور وہ زبردست حوصلہ دیا کہ جس سے ایمان والوں کی آنکھوں کو ٹھنڈک حاصل ہوتی ہے۔ ہم نے اپنا معاملہ اللہ پاک کے حوالے کردیا، ہمیں صرف اور صرف اسی کی ذات سے فضل وکرم، فرحت ومسرت اور فوز ونصرت کا انتظار ہے۔ وہ ہمارا مولی ہے، اور ظالموں کا تو کوئی مولی ہی نہیں ہے۔

پانچ برس کی یہ کچھ تصویریں ہیں، جو میں بھیج رہا ہوں ان کے لئے بھی جو عشرت کدوں میں بیٹھ کر ہم پر ہنستے ہیں اور ان کے لئے بھی جو ہم سے محبت کرتے ہیں۔

پہلی تصویر: ظالموں نے ہمیں قیدخانوں کی مضبوط دیواروں اور آہنی سلاخوں کے درمیان ہر طرح سے مقید کردیا، ایسے میں رب رحمان نے ہم پر آسمان سے رحمتوں اور برکتوں کے دروازے کھول دئے، سیکھنے کی طلب اور بندگی کے شوق ہمارے پر بن گئے، اور ہم اللہ سے قریب ہونے کے لئے بیتاب ہوئے اور عرش کے گرد پرواز کرنے لگے۔ جیلوں میں محض ہمارے جسم رہ گئے، ہماری روحیں اور ہمارے دل ودماغ مقام علیین کی بلندیوں کا لطف لیتے رہے۔

دوسری تصویر: انہوں نے ہم پر جھوٹی تہمتیں لگائیں، عدالتی کارروائیوں کے ڈرامے رچے، اور ہمارے خلاف سزائے موت اور عمر قید کے فیصلے کئے، ہم نے پیکر تسلیم ورضا بن کر ہر آزمائش کا سامنا کیا، سو اللہ نے ابدی محبت سے ہمیں ڈھانپ دیا، پمارے دل اللہ سے ملنے کے لئے بے تابی سے اچھلنے لگے، اور “جو اللہ سے ملنے کی چاہ رکھتا ہے، اللہ اس سے ملنا پسند کرتا ہے” ہم میں سے کوئی بھی پیچھے نہیں ہٹا۔

ہم اپنے بھائیوں کی آنکھوں میں اللہ کے فیصلے پر راضی ہوجانے کی مسکراہٹ اپنی آنکھوں سے دیکھتے، اور اپنی آنکھوں سے یہ بھی دیکھتے کہ ظالم ججوں، جھوٹے گواہوں، اور جیل کے جلادوں کے چہروں پر نحوست اور بے اطمینانی چھائی رہتی ہے۔ ان پر غصے اور نفرت کی پرچھائیاں صاف دکھائی دیتی ہیں۔ خدا کی قسم ہمارے سینوں کی کیفیت تو ایسی ہے کہ جیسے یہ نہایت وسیع وعریض باغات ہوں، جن میں ہرے بھرے درخت ہوں، ان میں لذیذ ترین پھل ہوں اور خوشبو بکھیرتے حسین وجمیل پھول کھلے ہوں۔

تیسری تصویر: انہوں نے ہمارے ہاتھوں سے قرآن چھین لئے، ایک عرصے تک ہمیں کتاب وقلم سے محروم رکھا، لیکن وہ بھول گئے کہ یہ وہ عظیم کتاب ہے جس کی آیتیں سینوں میں محفوظ رہتی ہیں۔ ہم اپنے سینوں میں بسی ہوئی قرآنی آیتوں اور اپنے دماغوں میں آباد سنتوں کی رفاقت میں ایک خوب صورت زندگی گزارنے لگے، ہم قرآن میں پڑھتے تھے ” ہم نے اسے اپنی پاس سے رحمت سے نوازا اور خاص اپنے پاس سے اسے علم سکھایا” اس عرصے میں ہم نے اپنے اوپر رب کریم کی اس خاص نوازش کو خوب خوب محسوس کیا۔ کتابوں کے لئے ہم نے اللہ سے خوب دعا کی، پس اللہ نے کتابوں کی آمد کا راستہ بھی کھول دیا، ہم نے اس دور میں سچ مچ اللہ اور اس کے رسول اور اس کے مومن بندوں سے محبت کا لطف خوب خوب اٹھایا، کار خیر اور نفع غیر کی بے پناہ لذت پائی، میں کبھی ایک دن کبھی دو دن اور کبھی تین دن میں قرآن ختم کرلیتا، میری یہ زندگی سنت نبوی کے انوار میں اور فقہ وشریعت اور زبان وادب کے مدرسوں کے سائے میں گزری، میں نے اپنی زندگی کے ان پانچ سالوں میں علم ومعرفت کی اس قدر روشنی پائی جو اس سے پہلے کے پچیس سالوں سے کہیں زیادہ تھی۔ جن لوگوں نے ہم سے قرآن پاک اور کتابیں چھین کر ضبط کئے تھے، وہ جہالت اور حماقت دونوں سے دوچار ہوئے، اور آخرت کی سزا سے پہلے اسی دنیا میں اس سے بڑی آفت کوئی اور نہیں ہوسکتی ہے۔

چوتھی تصویر: انہوں نے ہم سے بیوی بچوں کے ساتھ رہنے کا لطف چھینا، ہمیں ہمارے اساتذہ اور طلبہ سے دور کیا، سمندروں، دریاؤں اور پرندوں اور گلستانوں کے مناظر ہم سے محجوب کئے گئے، لیکن خدا کی قسم کھاکر کہتا ہوں، ہم خوابوں میں اپنے بیوی بچوں اور اپنے اساتذہ اور شاگردوں کی رفاقت سے بھرپور نہایت شان دار زندگی کا لطف اٹھاتے رہے۔ میری پسندیدہ ریاضت تیراکی ہے، اللہ نے مجھے خوابوں میں خوب صورت ترین دریاؤں اور سمندروں کے ساحلوں میں تیراکی کے مزے کرائے، جہاں کوئی گندگی نہیں ہوتی تھی، اللہ نے ہمیں ایسے ایسے لذیذ کھانے کھلائے جیسے آزادی کے زمانے میں ہم نے کبھی نہیں کھائے تھے، حالانکہ میں نے دنیا کے بہت سے ملکوں کا سفر کیا ہے، اور انواع واقسام کے کھانے کھائے ہیں، واللہ ایسا لگتا کہ ہم اللہ کی جنت کے کھانے کھارہے ہیں۔ یہی نہیں ہم نے ایسی ہریالی ایسے پھل اور ایسے خوش نما باغات دیکھے جو دنیا میں ہم نے کبھی نہیں دیکھے تھے۔ ہمیں یقین ہے کہ ہماری مظلوم آہوں کے لئے آسمان کے سارے دروازے کھلے ہوئے ہیں۔ ان کا حال ہوچھو جو دن رات ہم پر ظلم کے پہاڑ توڑتے رہے، ان کے گھروں میں کس طرح بغض ونفرت کی آگ لگی ہوئی ہے، گھر کا سکون کس طرح رخصت ہوگیا ہے، اور ان کے گھر کس طرح خود ان کے لئے تعذیب خانے بنے ہوئے ہیں۔

پانچویں تصویر: یہ ظالم ہمارے سلسلے میں حیرانی کا شکار رہے، انہوں نے ہمیں پیشہ ور اور نہایت خطرناک مجرموں کے ساتھ رکھا، ان کی بدکلامی، ان کی بے تحاشا سگریٹ نوشی اور ان کی ایک ایک حرکت ہمارے لئے سخت اذیت کا باعث تھی، لیکن ہم نے ان کے لئے محبت کے پر بچھائے، ان کو خوب صورتی کے ساتھ سمجھایا، اللہ کے فضل سے انہوں نے توبہ کی، اور بہترین توبہ کی، اور قرآن وسنت یاد کرنے میں ایسا لگے کہ آنکھیں ٹھنڈی ہوجائیں، یہ دیکھ کر ان ظالموں نے ہمیں وہاں سے ہٹادیا، اور سیاسی قیدیوں کے ساتھ رکھ دیا۔

میری تمنا
جیل کی ان تصویروں کے ساتھ میری کچھ تمنائیں بھی منسلک ہیں:

کتنا اچھا ہو اگر ہم ایک منصوبہ پوری امت کے لئے لے کر اٹھیں، ہم فلسطین میں آزادی اور دفاع کی جدوجہد کرنے والوں کو چھوڑ نہ دیں کہ وہ تنہا غاصب صہیونی دشمنوں اور ان کی پشت پناہ صلیبی اور ملحد مغربی قوتوں کا سامنا کریں ، ہم اس منصوبے کو فلسطینی اسیروں کی آزادی سے لے کر مسجد اقصی، قدس اور فلسطین کی آزادی کا منصوبہ بنادیں، اس طرح کہ یہ ایک اسلامی، عربی اور انسانی قضیہ ہوجائے، اور اس میں تمام اسلامی قومی اور عالمی انصاف پسند دھارائیں شامل ہوجائیں، اسے مسلمان مددگار بھی ملیں اور غیر مسلم مددگار بھی ملیں۔

اور کتنا اچھا ہو اگر پوری امت کو اسلام سے قریب کرنے اور شریعت کو نافذ کرنے کا مشن ہم سب کا مشن بن جائے۔

میری قوم کے لوگو، یہ مشن وہ فریضہ ہے جس کی ادائیگی کے لئے وقت میں ذرا بھی وسعت نہیں بچی ہے، ایک دن کی بھی تاخیر کی گنجائش نہیں ہے، ایک ہی دن میں سیاسی میدان میں امت پر جبر واستبداد کا شکنجہ اور زیادہ کس جائے گا، معاشی میدان میں سود اور کرپشن میں اور اضافہ ہوگا، سماجی سطح پر بدکاری اور اباحیت اور بڑھے گی، صحافت میں جھوٹ اور بے حیائی اور بڑھے گی، خاندانوں میں تفریق اور بیزاری کی کیفیت میں اور شدت آئے گی، فرد میں لالچ اور خود غرضی کا زہر اور سرایت کرجائے گا، ملکی سطح پر پسماندگی بڑھے گی اور اخلاق میں اور گراوٹ آئے گی، اور دنیا بھر میں صہیونی اور صلیبی اور اشتراکی قوتوں کا قبضہ اور بڑھتا جائے گا۔ ان بڑے بڑے گناہوں کے ساتھ ہم اللہ کا سامنا کیسے کریں گے؟

مجھے عظیم دین اسلام کے بارے میں کوئی اندیشہ نہیں ہے، بندوں کے رب نے قرآن وسنت اور اس پیغام کی حامل جماعت کی حفاظت کے ساتھ اس دین کی حفاظت کا ذمہ لیا ہوا ہے، لیکن مجھے ڈر ہے اپنے بارے میں، اپنے بھائیوں اور بہنوں کے بارے میں، کہ کہیں قیامت کے دن یہ نہ کہا جائے: “کیا ہم نے تمہیں وہ زندگی نہیں دی تھی، جس میں نصیحت لینے والا نصیحت لے لیتا، اور تمہارے پاس ڈرانے والا بھی آیا تھا؟”

بار الہا، ہم پر اور ہماری امت پر جو حالت چھائی ہوئی ہے اسے دور کردے، اور ہم سے وہ کام لے لے جو تجھے سب سے زیادہ پسند ہو۔

What is going on in CBI? and Prime Minister’s Office in INDIA?

 

Is it Media War? Or War on Media?

And yet another pen is broken!

BODY OF KHASHOGGI

THE WASHINGTON POST
REPORTER

BODY FOUND
DISMEMBERED

MAINSTREAM MEDIA
BLACKOUT.  https://youtu.be/8IRZ9YdN4NA

National Dastak

https://www.youtube.com/channel/UC7IdArS3MibBKFsqckq8GhQ

Journalism For Sale.

MeToo Campaign

What is India’s caste system?

What is India’s caste system?

https://www.bbc.com/news/world-asia-india-35650616

IAS Preparation

http://visionias.in/

Test series is the hallmark of the of Vision IAS. Every year thousands of students utilise Vision IAS test series based on INNOVATIVE ASSESSMENT SYSTEM™ to improve their scores. The immense response from the students and huge surge every year is a living testimony of our commitment to quality. The test series from Vision IAS has become an indispensable tool for every serious aspirant.

Program Objective:
This is a comprehensive and intensive ‘interactive’ distance learning / online / class room program focusing on sincere IAS Aspirants who will appear in Civil Service Exam . Our experts provide step by step guidance to aspirants for understanding the concepts of the subject and prepare them for effective answer writing.
Approach & Strategy:
Our simple, practical and focused approach will help aspirants understand the demand of UPSC exam effectively. Our strategy is to constantly innovate to keep the preparation process dynamic and give personalized attention to individual aspirants based on factors like core competence, availability of time and resource and the requirement of Civil Service Exam.

Our Interactive Learning approach (Email / Telephonic Discussion with Experts) will continuously improve aspirant’s performance in the right direction.

 

TEST SERIES

 

Test series is the hallmark of the of Vision IAS. Every year thousands of students utilise Vision IAS test series based on INNOVATIVE ASSESSMENT SYSTEM™ to improve their scores. The immense response from the students and huge surge every year is a living testimony of our commitment to quality. The test series from Vision IAS has become an indispensable tool for every serious aspirant.

Program Objective:
This is a comprehensive and intensive ‘interactive’ distance learning / online / class room program focusing on sincere IAS Aspirants who will appear in Civil Service Exam . Our experts provide step by step guidance to aspirants for understanding the concepts of the subject and prepare them for effective answer writing.
Approach & Strategy:
Our simple, practical and focused approach will help aspirants understand the demand of UPSC exam effectively. Our strategy is to constantly innovate to keep the preparation process dynamic and give personalized attention to individual aspirants based on factors like core competence, availability of time and resource and the requirement of Civil Service Exam.

Our Interactive Learning approach (Email / Telephonic Discussion with Experts) will continuously improve aspirant’s performance in the right direction.

We provide following modules for test series –

Mains – 2019

Prelims – 2019

Mains – 2018

Register

 

CLASSROOM

 


 

FOUNDATION COURSE 2019

(GENERAL STUDIES PRELIM & MAINS)

Fee: Rs 1,50,000 [Online classes* – Rs 1,40,000]
Classes Start
Regular Batch   : Oct 23, 2018  (09:00 AM)
Regular Batch   : Sep 25, 2018 (01:00 PM)
Regular Batch   : Aug 21, 2018  (09:00 AM)
Regular Batch   : July 18, 2018  (01:00 PM)
Weekend Batch : Aug 25, 2018   (09:00 AM)
Weekend Batch : June 9, 2018   (09:00 AM)

learn more

 

ALTERNATIVE CLASSROOM PROGRAMME  2020

(GENERAL STUDIES PRELIM & MAINS)

Fee: Rs 1,85,000 [Online classes* – Rs 1,75,000]
Classes Start
Regular Batch   : Oct 23, 2018  (09:00 AM)
Regular Batch   : Sep 25, 2018 (01:00 PM)
Regular Batch   : Aug 21, 2018  (09:00 AM)
Regular Batch   : July 18, 2018  (01:00 PM)
Weekend Batch : Aug 25, 2018   (09:00 AM)
Weekend Batch : June 9, 2018   (09:00 AM)

learn more

 

ALTERNATIVE CLASSROOM PROGRAMME  2021

(GENERAL STUDIES PRELIM & MAINS)

Fee: Rs 2,10,000 [Online classes* – Rs 2,00,000]
Classes Start
Regular Batch   : Oct 23, 2018  (09:00 AM)
Regular Batch   : Sep 25, 2018 (01:00 PM)
Regular Batch   : Aug 21, 2018  (09:00 AM)
Regular Batch   : July 18, 2018  (01:00 PM)
Weekend Batch : Aug 25, 2018   (09:00 AM)
Weekend Batch : June 9, 2018   (09:00 AM)

learn more


 

        फाउंडेशन कोर्स 2019
सामान्य अध्ययन

(प्रारंभिक और मुख्य परीक्षा के लिए)

हिंदी माध्यम

प्रारंभिक + मुख्य + सीसैट कक्षाएं
फी: ₹ 1,35,000 [ऑनलाइन कक्षाएं* – ₹ 1,20,000)
प्रारंभिक + मुख्य कक्षाएं
फी: ₹ 1,20,000 [ऑनलाइन कक्षाएं* – ₹ 1,05,000)
कक्षाएं प्रारंभ : सितम्बर 11, 2018  (09:00 AM)
अगस्त 2, 2018  (05:00 PM)
जून 25, 2018  (09:00 AM)
मई 8, 2018  (01:00 PM)

विस्तृत में पढ़ें

 

CAPSULE MODULE ON ETHICS-PAPER IV

Fee: Rs 11,000 [Online classes* – Rs 10,500](including all taxes)
Classes Start: July 21, 2018
Time : 12:30 PM

learn more

 

 

FOUNDATION COURSE 2019

(GENERAL STUDIES PRELIM & MAINS)

*JAIPUR CENTRE ONLY*
(ENGLISH MEDIUM)
All Batches Classes starts from 24th Aug 2018
Morning Batch (7:00 AM) [Fee: Rs. 1,10,000]
Evening Batch (5:30 PM) [Fee: Rs. 1,10,000]

learn more

Hindi MEDIUM (4:00 PM][Fee: Rs. 95,000]

learn more


 

GENERAL STUDIES PRELIM & MAINS
(REGULAR) : 2019

*LUCKNOW CENTRE ONLY*

(ENGLISH MEDIUM)
Fee: Rs 1,20,000 (including all taxes)
Classes Start : Sep 11, 2018
Time: 5:00 PM
learn more
(HINDI MEDIUM)
Fee: Rs 95,000 (including all taxes)
Classes Start : Oct 04, 2018
Time : 09:00 AM

learn more

 

GENERAL STUDIES PRELIM & MAINS
(REGULAR) : 2019

*PUNE CENTRE ONLY*

(ENGLISH MEDIUM)
Fee: Rs 1,15,000 (including all taxes)
Classes Start : July 16, 2018
June 06, 2018

learn more

 

GENERAL STUDIES PRELIM & MAINS
(REGULAR) : 2019

*AHMEDABAD CENTRE ONLY*

(ENGLISH MEDIUM)
Fee: Rs 1,20,000 (including all taxes)
Classes Start : July 10,2018
Time : 09:00 AM
learn more
(HINDI MEDIUM)
Fee: Rs 1,05,000 (including all taxes)
Classes Start : July 10,2018
Time : 05:30 PM

learn more


 

GENERAL STUDIES PRELIM & MAINS
(REGULAR) : 2019

*HYDERABAD CENTRE ONLY*

(ENGLISH MEDIUM)
Fee: Rs 1,20,000 (including all taxes)
Classes Start : July 19, 2018 (4:00 PM)
June 10, 2018 (4:00 PM)
May 15,2018 (6.30 AM)

learn more

 

MAINS 365 : 2018

(ENGLISH MEDIUM)
Fee: Rs 18,000 [Online classes* – Rs 17,000]
Classes Start : July 24, 2018
Time : 5:00 PM
(HINDI MEDIUM)
Fee: Rs 16,000 [Online classes* – Rs 15,000]
Classes Start : Aug 1, 2018
Time : 5:00 PM

learn more

 

ANTHROPOLOGY FOUNDATION COURSE  : 2019

*HYDERABAD CENTRE ONLY*

(ENGLISH MEDIUM)
Fee: Rs 36,000 [Online classes* – Rs 40,000]
Classes Start : June 7, 2018
Time : 10:30 AM

learn more


 

SOCIOLOGY FOUNDATION COURSE : 2018

*HYDERABAD CENTRE ONLY*

*OFFLINE CLASSES ONLY*

Fee: Rs 36,000 (including all taxes)
Classes Start : June 25, 2018
Time : 10:30 AM

learn more

 

GS MAINS ADVANCED COURSE : 2018

Fee: Rs 65,000 [Online classes* – Rs 60, 000](including all taxes)
Classes Start: June 18, 2018
Time : 04:30 PM

learn more

 

 

ESSAY ENRICHMENT PROGRAMME : 2018

Online/Offline Fee: Rs 8,000 (including all taxes)
Classes Start : July 21, 2018
June 23, 2018
Time : 05:00 PM

learn more

INTERVIEW

Our program provides a dedicated support system for holistic personality development of the candidate to give him the confidence to face the interview board successfully.

Features

  • DAF analysis session with senior faculty members of Vision IAS
  • Mock Interview sessions with Ex Bureaucrats/Educationists
  • Interaction with Previous toppers and Serving bureaucrats
  • Performance Evaluation and Feedback
Program Fee

  • Personality Test program – Rs. 3500 (Rs. 2500 for Vision IAS Students)

 

Important Instructions:

  • Submit your DAF only at interview@visionias.in
  • For queries regarding DAF analysis and Mock interview contact at 7042413505

 

 

 

RESOURCES

  • Current Affairs

  • Infographics

  • All India News

  • UPSC Paper Solution

  • Talks And Interviews

  • Toppers Answer Copy

CAREER WITH US

We are committed to quality and integrity, and strongly believe the success of our students depend greatly on the competence and attitude of our experts. If you feel that you have the right mindset and also passion and dedication, do contact us. We always welcome fresh talent.
To become a part of Vision IAS Team, Please send your resume to  hr@visionias.in

OUR CENTERS

Head Office (Central Enquiry)

2nd floor, Apsara Arcade,
Near Gate-7 Karol Bagh Metro Station,
1/8 b, Pusa Road, Karol Bagh, Delhi – 110005
 +91 8468022022, +91 8437922022
 enquiry@visionias.in, info@visionias.in

 Google Map

Rajinder Nagar Mains Test Center

16-B, 2nd Floor,
National Trust Building,
Bada Bazar Road
Old rajinder nagar ,
New delhi-110060

 Google Map

Rajendra Park Classroom Center

3rd Floor, 8, Rajendra Park,
Near Rajendra Place Metro station
(Pillar no 154) Pusa Road ,
New Delhi-110008

 Google Map

IAPL Classroom Center

2nd Floor, IAPL House,
19, Pusa Rd,
Block 8, WEA, Karol Bagh,
Delhi – 110005

 Google Map

Mukherjee Nagar Enquiry & Registration Office

635, Opposite Signature View Apartments,
Banda Bahadur Marg,
Mukherjee Nagar,
New Delhi – 110009

 Google Map

Mukherjee Nagar Test Center

M-1/4, Plot No -A-12/13, 1st Floor,
Ansal Building, Near Vidhya Sagar Homeopathic
Clinic, Dr. Mukherjee Nagar,
New Delhi – 110009

 Google Map

Pune Center

303, Eiffel Square Building,
Tilak Road, Sadashiv Peth (Near Shakti Sports)
Pune-411030
02040040015
 pune@visionias.in

 Google Map

Jaipur Center

VISION IAS (ANOOP KR SINGH)
119, Apex Mall, Tonk Road,
Jaipur-302015
+91 9001949244, +91 9799974032
 jaipur@visionias.in

 Google Map

Hyderabad Center

1-10-140/A, 3rd Floor, Rajamani Chambers,
ST.NO.8, Ashok Nagar, Hyderabad
Telangana – 500020
 +91 9000104133, +91 9494374078,
+91 9000070839
 hyderabad@visionias.in

 Google Map

Ahmedabad Center

101, First Floor, Addor Ambition,
Near Navkar Institute,
Navrang School Circle, Navrangpura,
Ahmedabad- 380009
 +91 9909447040, +91 7575007040,
+91 79-48997040
 ahmedabad@visionias.in

 Google Map

Lucknow Center

2nd Floor, B – 19, above Pappu store,
Sector K, Aliganj,
Lucknow,
U.P. – 226024
+91 7042413943
 enquiry@visionias.in, info@visionias.in

 Google Map

Greater Noida Center

Office No. 6, 1st Floor, Jagat Plaza Extension,
Jagat Farm, Sector Gamma-I,
Greater Noida,
U.P. – 201308

 Google Map

Bengaluru Test Center
(In Association with CREDENCE IAS)

1/19,1st Floor, Nanjaiah Complex,
1st Main, Club Road, Vijayanagar,
(landmark: Opposite Vijayanagar club)
Bengaluru-560040

+91 9535944422, +91 7503016555
 enquiry@visionias.in
 Google Map

A report on Modi verses Dr.Manmohan Singh

https://m.facebook.com/stories/view_tray/1678574625487491/?tray_session_id=03ba9c75-928c-bea7-fe21-a9a8029f47e3&thread_id=10215928874629707

Journalists Opinions at Constitution Club of India.

Senior Journalist, Nikhil Wagle points out the many loopholes in the Pune Police’s claims about the Bhima Koregaon case that led to the arrests of several activists across the country. He sheds light on the recent Supreme Court verdict on the case and talks about how this verdict is being misused by people like Amit Shah and Devendra Fadnavis to push their political agendas.